گانچھے ( محمد علی عالم ) نومنتخب رکن اسمبلی شیرین اختر نے کہا کہ میرٹ کی بالادستی اور کرپشن کا خاتمہ ہماری اولین ترجہح ہے اس میں ہم کسی قسم کی کوئی سمجھوتا نہیں کرے گے۔ عوام کو تین ماہ میں گلگت بلتستان میں واضح تبدیلی نظر آئے گی۔ وزیراعظم پاکستان نے جو اعلانا ت کئے ہیں ان پر بہت جلد عمل درآمد ہونگے۔ سکردوگلگت روڈ ،نئے اضلاع اور بلتستان یونیورسٹی پر کام شروع ہوا ہے۔

انہوں نے کہا کہ میں بحیثیت خاتون رکن اسمبلی علاقے میں خواتین کی فلاح و بہبود کے لئے کام کروں گی ۔صحت تعلیم اور معاشرتی خصو صاً خواتین کو جو مسائل درپیش ہیں ان کے لئے اسمبلی فلور پر آواز اُٹھاوں گی۔ علاقے میں جہا ں جہاں سکولوں اور ہسپتالوں کی بلڈنگ بنی ہوئی ہے ان کی پی سی فور منظور کراکے سٹاف بھرتی کریں گے۔

انہوں نے کہا کہ پورے ضلع میں طالبات کو تعلیم حاصل کرنے کے سکول دور ہیں ان جگہوں پر قریب میں سکول تعمیر کریں گے۔ انہوں نے کہا کہ گلگت بلتستان کے اند ر حافظ حفیظ الرحمان کی قیادت میں ترقیاتی کاموں کا جال بچھائیں گے۔ عوام کو گھر کے دوازے پر انصاف ملے گااور ہر کام میرٹ پر ہوگا۔ انہوں نے کہا کہ (ن) لیگ کے اعلیٰ قیادت نے مجھ پر اعتماد کا اظہار کیا ہے جس پر میں ان کا شکر گزار ہوں اور میاں محمد نواز شریف کی مشن کو پایا تکمیل تک پہنچانے کے لئے دن رات کوشش کرونگی۔

Comments are closed.